کم مراعات یافتہ طلبہ کو مستقل طور پر تعلیم کی فراہمی کیلئے پی ایس او نے ٹی سی ایف اسکول اپنالئے

Date: 2017-12-04
کم مراعات یافتہ طلبہ کو مستقل طور پر تعلیم کی فراہمی کیلئے پی ایس او نے ٹی سی ایف اسکول اپنالئے
پاکستان اسٹیٹ آئل کمپنی لمیٹڈ، پاکستان کی سب سے بڑی آئل مارکیٹنگ کمپنی ہے جس نے پاکستان میں غیرمنافع بخش بنیادوں پر تعلیم کے شعبہ کیلئے کام کرنے والے ادارے دی سٹیزن فاؤنڈیشن (ٹی سی ایف )کو 12ملین روپے کا عطیہ پیش کیا ہے۔ اس کا اعلان پی ایس او کے تحت منعقد ہونے والی ایک تقریب میں کیا گیا جس میں پی ایس او کے ایم ڈی اور سی ای او شیخ عمران الحق نے ٹی سی ایف کے شریک بانی جناب مشتاق چھاپرا کو عطیہ کا چیک پیش کیا۔ اس موقع پر پی ایس او سی ایس آر ٹرسٹ کے چیئرمین یعقوب ستار اور دونوں کمپنیوں کے دیگر اعلیٰ عہدے داربھی موجود تھے۔

پاکستان تعلیم کے شعبہ کی صورتحال کی بہتری کیلئے مصروف عمل ہے۔ اعداد وشمار بتاتے ہیں کہ5سے16سال کی عمر کے تقریباََ 44%بچے اسکول نہیں جاتے۔ پی ایس او سی ایس آر ٹرسٹ کے ٹی سی ایف کو عطیہ سے مختلف غیر مراعات یافتہ مستحق طلبہ کو تعلیم کے حصول میں مدد ملے گی۔ٹی سی ایف سے تعاون کے معاہدے کے تحت پی ایس او5 ٹی سی ایف کیمپسس کو اپنائے گااور پی ایس او کے تعاون سے ایک سال کے عرصہ میں ان کی تعمیر بھی کرے گا۔ان پانچ اسکولوں میں سے تین کا تعلق اس علاقہ سے ہے جہاں 2008میں خوفناک زلزلہ آیا تھا۔ درج بالا عطیہ کے علاوہ پی ایس او ملک کے پسماندہ علاقوں میں ٹی سی ایف کیمپس تعمیر بھی کرے گا۔پی ایس او سی ایس آر ٹرسٹ کے ممبر جناب بابر چوہدری اور ٹی سی ایف کے نائب صدر جناب ضیا اخترعباس نے اس تعاون کے لئے مفاہمت کی ایک یادداشت پر دستخط بھی کئے۔ اس تقریب سے خطاب کرتے ہوئے پی ایس او کے ایم ڈی اور سی ای او شیخ عمران الحق نے کہا:

"پاکستان میں لاکھوں بچے اسکو ل جانے سے محروم ہیں۔ان بچوں کو تعلیم فراہم کرنا ہم سب کی مشترکہ ذمہ داری ہے۔پڑھے لکھے افراد ہی معاشی ترقی اور ملک کے روشن مستقبل کی ضمانت ہیں۔

پی ایس او ایک ذمہ دار شہری ادارہ ہونے کی حیثیت سے سماجی اور معاشی ترقی کے لئے تعلیم، صحت ، معاشرے کی بہبود اور آفات میں مدد فراہم کرنے کیلئے فلاحی خدمات انجام دینے میں پیش پیش رہتا ہے۔

ہمیں ٹی سی ایف کے پاکستان کے شہریوں کیلئے درجوں میں تقسیم اور امتیاز کے خلاف مشن میں اشتراک سے بڑی خوشی محسوس ہورہی ہے جو ایک مثبت تبدیلی کی علامت ہے۔ ٹی سی ایف کے ساتھ ہمارے تعاون سے بعض انتہائی پسماندہ علاقوں کے مستحق بچوں کو اسکول جانے میں مدد ملے گی۔ یہ پی ایس او کی جانب سے ایک عاجزانہ کوشش ہے جو قوم کو درپیش مشکلات کو دور کرنے کیلئے سرگرم عمل پے۔

ٹی سی ایف کے شریک بانی جناب مشتاق چھاپرانے اپنی تقریر میں کہا: "ہم پی ایس او کی اس فراخدلانہ امداد پر ان کے بے حد شکر گزار ہیں جس سے دیہی علاقوں کے غیر مراعات یافتہ بچوں کو فائدہ ہوگاجہاں یہ اسکول قائم کئے گئے ہیں۔یہ انتہائی قابل تعریف قدم ہے کہ پی ایس او نے ایک مرتبہ پھرپانچ ٹی سی ایف اسکولوں کیلئے امداد فراہم کی ہے ۔ ۲ ۔

اس امداد سے 1000سے زیادہ بچوں کو اپنی اسکول کی تعلیم جاری رکھنے میں مدد ملے گی اور بلوچستان اور خیبر پختونخوا کے دوردراز علاقوں میں آباد لوگوں کا معیار زندگی بلند ہوگا۔تعلیم کا حصول بتدریج نتائج فراہم کرتا ہے اور فوری طور پر اس کے نتائج کی توقع نہیں کی جاسکتی۔ تاہم اس طویل المدت سرمایہ کاری سے بھی کئی طرح کے فائدے حاصل ہوں گے۔اس سے نہ صرف بچوں کی زندگی پر اچھے اثرات مرتب ہوں گے بلکہ ان خاندانوں کی زندگی میں بھی بہتر ی کے آثار پیدا ہوں گے۔اس سے غربت کے خاتمے میں بھی مدد ملے گی اور وہ ایک بہتر شہری بن سکیں گے۔

ہم بڑی کارپوریشنز سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ بھی آگے بڑھیں اور ایک خوشحال اور تعلیم یافتہ پاکستان بنانے میں اپنا کردار ادا کریں۔"